پیر, 25 جنوری 2021

تازه‌ ترین عناوین

آمار سایت

مہمان
50
مضامین
456
ویب روابط
6
مضامین منظر کے معائنے
553871
comintour.net
stroidom-shop.ru
obystroy.com
лапароскопия паховой грыжи

عراقی فوج نے دھشتگرد ٹولے داعش کے مقابلہ میں پیشقدمی کا مظاہرہ کرتے ہوئے صوبہ دیالہ کے دو علاقوں السعدیہ اور جلولاء کو داعش سے آزاد کروا لیا ہے۔ تصاویر
عراق کی عسکری تنظیم البدر کے سیکریٹری جنرل ھادی العامری نے کہا: عراقی فوجی رضاکار جوانوں کی قربانیوں کی بدولت صوبہ دیالہ کے علاقے السعدیہ اور جلولاء کو داعش کے کنٹرول سے خارج کرنے میں کامیاب ہو گئی ہے۔

کانفرنس کے ترجمان حجۃ الاسلام ڈاکٹر علی زادہ موسوی کے مطابق اس کانفرنس میں پورے عالم اسلام سے 300 سے زیادہ علماء اور مفتیان کرام شریک ہو رہے ہیں۔ ان علمائے کرام کا تعلق مختلف اسلامی مکاتب فکر سے ہے۔ قم المقدسہ (ایران) میں آج 23 اور 24 نومبر 2014ء کو انتہا پسندی اور تکفیریت کے خلاف عالمی کانفرنس شروع ہوگئی ہے۔ اس کانفرنس کا عنوان ہے: المؤتمر العالمی آراء علماء الاسلام فی التیارات المتطرفۃ والتکفیریۃ. اس کانفرنس کے داعی اور میزبان عالم تشیع کے نامور مرجع آیت اللہ العظمٰی شیخ ناصر مکارم شیرازی ہیں۔

اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی نے اس کانفرنس کے انعقاد میں تعاون کے علاوہ نمائش میں بھی حصہ لیا اور امام سجاد علیہ السلام سے متعلق اپنی شائع کردہ کتابوں کو نمائش کے طور پر لگایا۔
مام سید الساجدین زین العابدین حضرت علی بن حسین علیہما السلام کی شہادت کے ایام میں کربلا میں حرم امام حسینی میں مختلف ممالک اور مختلف ادیان کی شخصیتوں کی موجودگی میں ایک بین الاقوامی کانفرنس کا انعقاد کیا گیا۔
حرم امام حسین علیہ السلام کے خاتم الانبیاء حال میں ۲۴ صفر کو منعقدہ اس کانفرنس میں حجۃ الاسلام و المسلمین شیخ عبد المھدی کربلائی نے خطاب کیا۔

قم المقدسہ (ایران) میں 23 اور 24 نومبر 2014ء کو انتہا پسندی اور تکفیریت کے خلاف عالمی کانفرنس منعقد ہو رہی ہے۔ اس کا عنوان ہے: المؤتمر العالمی آراء علماء الاسلام فی التیارات المتطرفۃ والتکفیریۃ. اس کانفرنس کے داعی اور میزبان عالم تشیع کے نامور مرجع آیت اللہ العظمٰی شیخ ناصر مکارم شیرازی ہیں۔ یہ ایک غیر سیاسی اور خالص علمی کانفرنس ہے، جس میں 83 ممالک سے ممتاز علمائے اسلام شرکت کر رہے ہیں۔ اس میں پاکستان سے شریک ہونے والے علماء میں صاحبزادہ ابوالخیر زبیر (صدر ملی یکجہتی کونسل و جمعیت علمائے پاکستان)، علامہ سید ساجد علی نقوی (سینیئر نائب صدر ملی یکجہتی کونسل و سربراہ اسلامی تحریک پاکستان)، مولانا محمد خان شیرانی(چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل)، علامہ ناصر عباس جعفری(سیکرٹری جنرل مجلس وحدت مسلمین)، سینیٹر مولانا گل نصیب (صوبائی امیر، خیبرپختونخوا، جمعیت علمائے اسلام)، علامہ محمد امین شہیدی (ڈپٹی سیکرٹری جنرل مجلس وحدت مسلمین)، مولانا عطاء الرحمن (جمعیت علمائے اسلام)، مولانا مفتی گلزار احمد نعیمی (سربراہ جماعت اہل حرم) اور راقم (ڈپٹی سیکرٹری جنرل ملی یکجہتی کونسل) شامل ہیں۔

تہران میں پاسنگ آوٹ پریڈ سے خطاب میں رہبر انقلاب اسلامی کا کہنا تھا کہ اسلام کے نام پر دہشتگرد گروہوں اور نام نہاد اسلامی حکومت کی تشکیل اور ان دہشتگرد گروہوں کے ذریعے بیگناہ افراد کا قتل عام، لوگوں کو اسلام سے ڈرانا اور خوفزدہ کرنا، دشمنوں کا ایک نیا حربہ ہے۔ استعماری طاقتیں اپنے تمام تر وسائل کے ذریعے حقیقی اسلام کی آواز کو دبانے کی کوشش کر رہی ہیں رہبر انقلاب اسلامی آیت اللہ العظمٰی سید علی خامنہ ای نے کہا ہے کہ مسلح افواج کی حقیقی طاقت کا لازمہ، جدید ترین ٹریننگ اور ہتھیاروں کا حامل ہونے کے ساتھ ساتھ ایمان، بصیرت، عزم راسخ اور حقیقی معنٰی میں ذمہ داری کے احساس کا حامل ہونا ہے۔